Xchat.pk

www.xchat.pk

حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم

1 Star2 Stars3 Stars4 Stars5 Stars (No Ratings Yet)
Loading...
Share:

How To Play:

حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم

حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میں مختلف کارنامے حضرت عمر فاروق رضی اللہ عنہ نے دنیا کو ایسے سسٹم دیے جو آج تک پوری دنیا میں رائج ہیں.، آپ نے نماز فجر میں الصلوٰۃ خیرمن النوم کا اضافہ کرایا۔ آپ کے عہد میں نماز تراویح کا باقاعدہ سلسلہ شروع ہوا۔. آپ نے شراب نوشی کی سزا مقرر کی۔ سن ہجری کا اجرا کیا۔ جیل کا تصور دیا۔ مؤذنوں کی تنخواہیں مقرر کیں،. مسجدوں میں روشنی کا بند و بست کرایا۔ پولس کا محکمہ بنایا۔ ایک مکمل عدالتی نظام کی بنیاد رکھی۔. آب پاشی کا نظام قائم کرایا۔ فوجی چھاؤنیاں بنوائیں اور فوج کا باقاعدہ محکمہ قائم کیا۔. آپ نے دنیا میں پہلی بار دودھ پیتے بچوں، معذوروں، بیواؤں اور بے آسراؤں کے وظائف مقرر کیے۔ آپ نے دنیا میں پہلی بار حکمرانوں، سرکاری عہدیداروں اور والیوں کے اثاثے ڈکلیئر کرنے کاتصور دیا۔ آپ نے بے انصافی کرنے والے ججوں کو سزا دینے کا سلسلہ بھی شروع کیا اور آپ نے دنیا میں پہلی بار حکمران کلاس کی اکاؤنٹبلٹی شروع کی۔ آپ راتوں کو تجارتی قافلوں کی چوکیداری کرتے تھے.۔ آپ فرمایا کرتے تھے جو حکمران عدل کرتے ہیں، وہ راتوں کو بے خوف سوتے ہیں۔ آپ کا فرمان تھا. ’’قوم کا سردار قوم کا سچا خادم ہوتا ہے۔‘‘ آپ کی مہر پر لکھا تھا ’’عمر! نصیحت کے لیے موت ہی کافی ہے‘‘۔ آپ کے دسترخوان پر کبھی دو سالن نہیں رکھے گئے۔ آپ زمین پر سر کے نیچے اینٹ رکھ کر سو جاتے تھے۔ آپ سفر کے دوران جہاں نیند آجاتی تھی، آپ کسی درخت پر چادر تان کر سایہ کرتے تھے اور سو جاتے تھے اور رات کو ننگی زمین پر دراز ہوجاتے تھے۔ آپ کے کرتے پر 14پیوند تھے. اور ان پیوندوں میں ایک سرخ چمڑے کا پیوند بھی تھا۔ آپ موٹا کھردرا کپڑا پہنتے تھے۔ آپ کو نرم اور باریک کپڑے سے نفرت تھی.۔ آپ کسی کو جب سرکاری عہدے پر فائز کرتے تھے تو اس کے اثاثوں کا تخمینہ لگوا کر اپنے پاس رکھ لیتے تھے اور اگر سرکاری عہدے کے دوران اس کے اثاثوں میں اضافہ ہوجاتا تو آپ اس کی اکاؤنٹبلٹی کرتے تھے۔. آپ جب کسی کو گورنر بناتے تو اسے نصیحت فرماتے تھے۔ کبھی ترکی گھوڑے پر نہ بیٹھنا،. باریک کپڑے نہ پہننا، چھنا ہوا آٹا نہ کھانا، دربان نہ رکھنا. اور کسی فریادی پر دروازہ بند نہ کرنا.۔ آپ فرماتے تھے ظالم کو معاف کردینا مظلوموں پر ظلم ہے. اور آپ کا یہ فقرہ آج انسانی حقوق کے چارٹر کی حیثیت رکھتا ہے۔ ’’مائیں بچوں کو آزاد پیدا کرتی ہیں، تم نے انہیں کب سے غلام بنالیا۔‘‘ فرمایا میں اکثر سوچتا ہوں اور حیران ہوتا ہوں۔ ’’عمر بدل کیسے گیا۔.‘‘ آپ اسلامی دنیا کے پہلے خلیفہ تھے، جنہیں ’’امیر المومنین‘‘ کا خطاب دیا گیا۔

.حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم. حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم

.حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم .حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم

.حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم. حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم

. حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم. حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دورِ خلافت میںم

Game Category: Islamic Artical

Leave a Reply